india

سوال # 154287

حلال جانور کی بٹ اور اوجھڑی کیا حلال ہے یا مکروہ ہے ؟ اگر مکروہ ہے تو مکروہ کی کونسی قسم ہے ؟ براہ کرم جواب سے آگاہ کراکر ہماری راہنمائی فرمائیں۔

Published on: Oct 3, 2017

جواب # 154287

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa: 1389-1356/N=1/1439



( ۱، ۲): حلال جانور کی اوجھڑی اور بٹ دونوں حلال ہیں، یہ دونوں حلال جانور کے ان سات اجزاء میں شامل نہیں جو ناجائز ہیں؛ اس لیے حلال جانور کی بٹ اور اوجھڑی کا کھانا جائز ہے (فتاوی رشیدیہ ، ص:۵۵۱،۵۵۲،باقیات فتاوی رشیدیہ، ص ۳۶۸،فتاوی دار العلوم دیوبند، ۱۵:۴۶۸، مطبوعہ: دار العلوم دیوبنداور فتاوی محمودیہ، ۱۷:۲۹۳-۲۹۶، مطبوعہ: ادارہٴ صدیق ڈابھیل وغیرہ)۔



 ما یحرم من أجزاء الحیوان المأکول سبعة: الدم المسفوح والذکر والأنثیان والقبل والغدة والمثانة والمرارة ، بدائع (رد المحتار، کتاب الذبائح ۹:۴۵۱ط مکتبة زکریا دیوبند)، وانظر الدر والرد (کتاب الخنثی، مسائل شتی ۱۰:۴۷۷، ۴۷۸) والفتاوی الھندیة (کتاب الذبائح، الباب الثالث فی المتفرقات ۵: ۲۹۰ط مکتبة زکریا دیوبند)، والکنز (مع التبیین ، کتاب الخنثی،مسائل شتی ۶: ۲۲۶ط المکتبة الإمدادیة، ملتان) أیضاً۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات