India

سوال # 145768

ہمارے پڑوسی اکثر اکراماً کھانے کی چیزیں دیتے رہتے ہیں جب کہ ان کی روزی کا ذریعہ جائز نہیں ہے، اس لیے ہم وہ نہیں کھاتے، تو کیا ہم یہ کھانا ہماری اپنی نوکرانی کو جو کہ مسلمان بھی ہے غریب بھی ہے اور بیوہ بھی ہے اسے دے سکتے ہیں؟ کسی غیر مسلم کو دینا کیسا ہے؟

Published on: Nov 17, 2016

جواب # 145768

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 086-043/H=2/1438



 



بہتر تو یہ ہے کہ حسن انداز کے ساتھ قبول کرنے سے معذرت کردیا کریں اگر قبول کرنے یا واپس کرنے میں کسی فتنہ کا اندیشہ ہوتو اپنی نوکرانی کو بھی دے سکتے ہیں اسی طرح غیر مسلم کو بھی جبکہ وہ دونوں غریب ہوں۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات