India

سوال # 165951

حضرت میرا سوال یہ ہے کہ غیر اسلامی ملک جیسے ہندستان وغیرہ میں اگر کسی سے ایسا گناہ سرزد ہو جائے جس کی سزا اسلامی ملک میں موت ہے تو وہ کیسے توبہ کرے جیسے کسی سے اگر زنا ہوا ہو تو یہاں تو اسے سنگسار نہیں کیا جا سکتا تو وہ اس گناہ کی تلافی کے لیے کیا کریں۔

Published on: Oct 31, 2018

جواب # 165951

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 124-108/D=2/1440



جس قدر سنگین گناہ ہو اسی کے بقدر شرمندگی گریہ وزاری کے ساتھ توبہ استغفار بھی ہونا چاہئے دوچار دس بار نہیں بلکہ بار بار اتنی مرتبہ ہو کہ خود آدمی کا دل گواہی دے کہ اللہ تعالی کو میرے حال پر ترس آگیا ہوگا اور اس نے معاف کردیا ہوگا۔



زنا پر سنگسار کرنے کی سزا کا حکم اسلامی ملک کے حاکم کو ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات