india

سوال # 160605

حضرت، میں نے اپنے کچھ ساتھیوں سے استخارہ کرنے کے لئے کہا تو ان کا یہ کہنا تھا کہ استخارہ کرنا بریلوی حضرات کا کام ہے اور دوسری بات یہ کہی کہ استخارہ میں تو شیطان بھی آجاتا ہے، کیا یہ بات صحیح ہے؟ وضاحت فرمائیں۔

Published on: May 10, 2018

جواب # 160605

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa:915-863/sd=8/1439



استخارہ ایک مسنون عمل ہے اور اس میں خواب کا نظر آنا ضروری نہیں ہے اور نہ ہی خواب معیار ہے، استخارہ کے بعد اصل اعتبار دل کے رجحان کا ہے، آپ کے ساتھیوں کی بات صحیح نہیں ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات