عقائد و ایمانیات - دعوت و تبلیغ

India

سوال # 154391

ہمارے بعض علماء کرام نے دعوت و تبلیغ کو بد عت کہا ہے ، کیا اصل میں دعوت و تبلیغ بدعت ہے ؟ اور انہوں نے بدعت کہا ہے تو کس بنیاد پر کہا ہے ؟
براہ کرم، تفصیل کے ساتھ جواب دیں۔

Published on: Oct 9, 2017

جواب # 154391

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa: 1496-1475/B=1/1439



فی نفسہ دین کی دعوت وتبلیغ تو فرض کفایہ ہے اسے دنیا کا ہرمسلمان دل وجان سے مانتا ہے یہ قرآن کا حکم ہے۔ البتہ مروجہ طریقہ جس میں بہت سی غیر ضروری کاموں کو ضروری سمجھ لیا ہے، اور بے جا غلو اختیار کرلیا ہے اس لیے بعض علماء اس طریقہٴ کار کو بدعت کہتے ہیں، ورنہ فی نفسہ دین کی دعوت وتبلیغ کو کوئی بھی بدعت نہیں کہہ سکتا۔ ہرکام میں اعتدال ہو تو کوئی کچھ نہیں کہے گا۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات