عقائد و ایمانیات - دعوت و تبلیغ

Pakistan

سوال # 146681

میرے چار بیٹے ہیں، سب اپنا اپنا کام کرتے ہیں، سب سے چھوٹا بیٹا اکیلا اپنی دوکان چلاتا ہے، وہ مجھ سے ضد کرتا ہے کہ میں دوکان چھوڑ کر تبلیغ پر جانا ہے، دوکان اللہ کے حوالے۔ میں اسے کہتا ہوں کہ صبح شام دوکان کے اوقات کے علاوہ اپنے مقام پر تبلیغ کر لیا کرو او رہم بزرگ ماں باپ ہیں ہماری خدمت کرو اور بڑھاپے میں پریشان نہ کرو۔ تبلیغ والے اسے کہتے کہ تم اللہ کی راہ میں جاوٴ، جانے کے بعد سب ٹھیک ہو جائے گا۔
برائے مہربانی بتائیں کہ میرے بیٹے کو جانا چاہئے کہ نہیں؟

Published on: Feb 28, 2017

جواب # 146681

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa ID: 267-188/Sn=5/1438



آپ نے بیٹے کو جو رائے دی ہے وہ بہت مناسب ہے، بیٹے کو اس پر عمل کرنا چاہیے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات