معاملات - بیع و تجارت

india

سوال # 172007

مسئلہ یہ ہے کہ مرغے کی دکان والے سے ہوٹل والے یہ ایگریمنٹ کرتے ہیں کہ مکمل ایک سال مرغے کا گوشت دینا ہے ۱۰۰ روپیے کلو ریٹ چاہے کچھ بھی ہو کتنا دینا ہے یہ طے نہیں ہوتا اور ریٹ کبھی ۵۰ فی کلو رہ جاتا ہے کبھی ۲۰۰ فی کلو ہو جاتا ہے کیا ایسا ایگریمنٹ کرنا شرعاً کیساہے؟ برا? مہربانی جواب بحوالہ عنایت فرمائیں مہربانی ہوگی ۔

Published on: Jul 17, 2019

جواب # 172007

بسم الله الرحمن الرحيم


Fatwa : 1137-950/D=11/1440



سوال میں مذکور طریقہ بیع نہیں بلکہ وعدہ بیع ہے جس کے نتیجے میں آئندہ جب جب مرغ دیا جائے گا اس کی بیع مکمل ہوتی رہے گی یہ جائز ہے؛ البتہ وعدہ بیع ہونے کی وجہ سے دکان دار اس بات کا پابند نہ ہوگا کہ روزانہ اسی وعدہ کے ریٹ پر مرغ دے بلکہ اگر وہ چاہے تو کبھی انکار بھی کر سکتا ہے گو اخلاقاً وعدہ کے خلاف کرنا برا ہے۔



واللہ تعالیٰ اعلم


دارالافتاء،
دارالعلوم دیوبند

اس موضوع سے متعلق دیگر سوالات